صفحۂ اول    ہمارے بارے میں    رپورٹر اکاونٹ    ہمارا رابطہ
پیر 30 نومبر 2020 

گورنمنٹ بوائز ہائی سکول گہل تباہی کے دہانے پر، سکول میں صرف ایک ایس ایس ٹی ٹیچرز

راجہ فرقان احمد | جمعرات 29 اکتوبر 2020 

نیو مری: (راجہ فرقان احمد) محکمہ ایجوکیشن راولپنڈی کی غفلت، لاپرواہی اور غیر قانونی اقدام سے گورنمنٹ بوائز ہائی سکول گہل تباہی کے دہانے پر پہنچ گیا۔ تفصیلات کے مطابق   گورنمنٹ بوائز ہائی سکول گہل حصہ ہائی میں تعلیم تو دور کی بات بچوں کو سنبھالنا اساتذہ کے لئے مشکل ہو گیا۔ حصہ ہائی جماعت دہم میں 68 طالبہ اور نہم میں 30 طالبہ زیر تعلیم ہے جبکہ ٹیچر صرف ایک رہ گیا ہے۔ محکمہ تعلیم راولپنڈی نے حصہ ہائی سے ایک ٹیچر محمد منصور علی جو کہ ہیڈ ٹیچر بھی تھے کا تبادلہ کر دیا اور دوسرے ٹیچر محمد کامران ایس ایس ٹی انگلش کی سی ای او آفس میں ملی بھگت سے ڈیوٹی لگا دیں۔ سکول میں صرف ایک ایس ایس ٹی ہے جو کہ ہیڈ ٹیچرز کے فرائض سرانجام دینے کے ساتھ ساتھ نہم اور دہم طلباء کو بھی پڑھا رہا ہیں۔ اہل علاقہ کی جانب سے کئی باراس معاملے پر داخواست دی گئی لیکن سنوائی نہ ہو سکی۔ راولپنڈی ٹیچرز یونین بھی اس معاملے پر ہمیشہ کی طرح خاموش تماشائی بنی ہے۔ عوام کا وزیراعلیٰ پنجاب،  وزیر تعلیم اور سیکریٹری تعلیم سے جلد سے جلد سکول میں ٹیچرز کی تعداد کو پورا کرنے کا مطالبہ۔

ہمارے بارے میں جاننے کے لئے نیچے دئیے گئے لنکس پر کلک کیجئے۔

ہمارے بارے میں   |   ضابطہ اخلاق   |   اشتہارات   |   ہم سے رابطہ کیجئے
 
© 2020 All Rights of Publications are Reserved by Aksriyat.
Developed by: myk Production
تمام مواد کے جملہ حقوق محفوظ ہیں © 2020 اکثریت۔